آسٹریلیا کے اسٹار گیندباز پر ’کورونا وائرس‘ کا خطرہ، ٹیم سے باہر

جنوبی افریقہ دورہ کے بعد سے ہی کین رچرڈسن کی طبیعت ناساز تھی اور ان کو گلے میں درد کی شکایت تھی۔ اس کے بعد انھیں نیوزی لینڈ کے خلاف تین میچوں کی یک روزہ سیریز کے پہلے میچ سے باہر کر دیا گیا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

کورونا وائرس کا قہر پوری دنیا میں جاری ہے اور اب کرکٹ کھلاڑی بھی اس کی زد میں آنے لگے ہیں۔ اندیشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ آسٹریلیائی تیز گیندباز کین رچرڈسن کو اس خطرناک وائرس نے اپنی زد میں لے لیا ہے۔ اس اندیشہ کے بعد رچرڈسن نیوزی لینڈ کے خلاف ہونے والے میچ سے باہر کر دیے گئے ہیں۔ قابل غور بات یہ ہے کہ رچرڈسن اس سال آئی پی ایل میں وراٹ کوہلی کی قیادت والی رائل چیلنجر بنگلور کی طرف سے کھیلنے والے تھے۔

میڈیا ذرائع سے موصول ہو رہی خبروں کے مطابق جنوبی افریقہ دورہ کے بعد سے ہی کین رچرڈسن کی طبیعت ناساز تھی اور ان کو گلے میں درد کی شکایت تھی۔ اس کے بعد انھیں نیوزی لینڈ کے خلاف تین میچوں کی یک روزہ سیریز کے پہلے میچ سے باہر کر دیا گیا۔ رچرڈسن کو فی الحال ٹیم کے باقی کھلاڑیوں سے علیحدہ رکھا گیا ہے۔ کرکٹ آسٹریلیا کا کہنا ہے کہ ہمارا میڈیکل اسٹاف ان کا علاج کر رہا ہے اور ضروری اقدامات کیے جا رہے ہیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل ہالی ووڈ ایکٹر ٹام ہینکس اور ان کی بیوی ریٹا ولسن بھی آسٹریلیا میں کورونا وائرس کے ٹیسٹ میں پازیٹو پائے گئے تھے۔ اس کی جانکاری انھوں نے ٹوئٹر پر دی تھی۔ ٹام نے لکھا تھا ’’میں اور ریٹا آسٹریلیا میں ہیں۔ ہمیں تھوڑی تھکان محسوس ہوئی۔ تھوڑی سردی بھی لگی ساتھ ہی جسم میں درد بھی تھا۔ ریٹا کو ٹھنڈ بھی لگ گئی اور بخار بھی تھا۔ سب کچھ ٹھیک کرنے کے لیے ہم نے ٹیسٹ کرایا، جیسا کہ ابھی دنیا میں ہو رہا ہے۔ ہم نے کورونا وائرس کے لیے اپنا ٹیسٹ کرایا اور ہم اس میں پازیٹو پائے گئے۔‘‘